ورلڈ کپ کا اگلا میزبا ن کون،ملک سامنے آگیا،تاریخ بھی بتادی

رپورٹ : عمران عثمانی

انٹر نیشنل کرکٹ کونسل ان دنوں اگلے 8سالہ ایف ٹی پی پر کام کر رہی ہے اور اس کے فائنل مرحلے تک بھی پہنچ گئی ہے جس کا اعلان چند دنوں میں متوقع ہے.2023 سے 2031 کے درمیان گلوبل ایونٹس کی تعداد بڑھانے کا بھی امکان ہے اور معمول کے ایونٹس بھی بہت ہیں جن میں مردوں کے 6ایونٹ ہیں.

ان ایونٹس کی میزبانی کے لئے متعدد ممالک سرگرم ہیں،ان میں پاکستان بھی شامل ہے جو ورلڈ ٹی20کے لئے درخواست کرچکا ہےلیکن تازہ ترین اطلاعات کے مطابق جنوبی افریقا نے ورلڈ کپ کی میزبانی کا دعویٰ کردیا ہے اور اس کے ساتھ اور بھی ایونٹس میں دلچسپی وکوشش کا بتایا گیا ہے.

کرکٹ کا اگلا ورلڈ کپ 2023میں بھارت میں شیڈول ہے،اس سے اگلا ایونٹ 2027 میں ہوگا،اسی طرح 2027 اور 2031 کے میگا ورلڈ کپ ایونٹس کے میزبان ممالک کا تاحال فیصلہ نہیں ہوا ہے لیکن کرکٹ جنوبی افریقا نے جمعہ کو واضح کیا ہے کہ اگلی میزبانی ہماری ہوگی.2023 ورلڈ کپ کا میزبان تو منتخب کیا جاچکا ہے،اس سے اگلے میزبان ہم ہونگے .ورلڈ کپ 2027 میں کھیلا جائے گا.کرکٹ جنوبی افریقا نے یہ بھی دعویٰ کیا ہے کہ وہ خواتین ورلڈ کپ اور ورلڈ ٹی 20کی میزبانی میں بھی دلچسپی رکھتے ہیں اور اس کے لئے بھی بھرپور کوشش کریں گے.

کرکٹ جنوبی افریقا نے پہلی بار 2023 ورلڈ کپ کی میزبانی کی ہے جو ایونٹ آسٹریلیا جیتا تھا،اسی طرح اس نےخواتین ورلڈ کپ 2005 کی کامیابی کے ساتھ میزبانی کی،پھر اہم ترین بات یہ تھی کرکٹ کے پہلے ٹی20 ورلڈ کپ کامیزبان بھی جنوبی افریقا تھا جب ٹی 20 ورلڈ کپ کا پہلا ایڈیشن بھارت نے جیتا تھا،اس نے فائنل میں پاکستان کو ہرایا تھا.2009کی چیمپئنز ٹرافی کی میزبانی بھی جنوبی افریقا نے کی تھی تو جنوبی افریقا کرکٹ کے میگا ایونٹ کی کامیاب میزبانی کا ریکارڈ رکھتا ہے.پھر یہاں انڈر 19ورلڈ کپ کے 2 ایڈیشنز بھی ہوچکے ہیں.

جمعہ کو کرکٹ جنوبی افریقا کے لئے ایک اور تسلی بخش بات یہ رہی کہ اس پر آئی سی سی کی جانب سے جاری پابندی کی تلوار بھی ہٹ گئی ہے کیونکہ حکومتی اسپورٹس حکام اور بورڈ کی جنرل کونسل کے مابین نئے ایم او یو کے نفاذ پر اتفاق ہوگیا ہے،اس طرح اب بورڈ کی جنرل کونسل آزادی کے ساتھ کام کرے گی اور آئی سی سی کے قانون کی خلاف ورزی کی مرتکب نہیں ہوگی،گزشتہ ہفتہ بڑا سخت گزرا تھا جب حکومتی مداخلت پربورڈ لاچار ہوگیا تھا اور یہ آئی سی سی قوانین کی خلاف ورزی تھی جس کی وجہ سے اس پر ورلڈ ٹی 20کے رواں سال کے ایڈیشن میں پابندی کا خطرہ منڈلارہا تھا.

کرکٹ جنوبی افریقا نے اگرچہ 2027کی میزبانی کا دعویٰ کیا ہے لیکن ابھی تاحال فیصلہ نہیں ہوا کیونکہ آئی سی سی نے اس حوالہ سے ابھی باقاعدہ اعلان نہیں کیا لیکن یہ بات طے ہے کہ جنوبی افریقا نے میزبانی کی اصولی درخواست دے دی ہے،اس کا مطلب یہ ہے کہ 2027 اور 2031کے ورلڈ کپ ایڈیشنز انگلینڈ،آسٹریلیا،بھارت میں سے کسی ملک میں نہیں ہونگے.جنوبی افریقا کے ساتھ ویسٹ انڈیز وامریکا مضبوط امیداور ہونگے.یہ کرک سین کا تجزیہ ہے جو غلط بھی ہوسکتا ہے لیکن بظاہر ایسا ہی لگتا ہے.