وسیم اکرم کےٹیسٹ کرکٹ میں ظہور کا دن،ریڈ بال کرکٹ کو چار چاند لگ گئے

عمران عثمانی
Image By buzzincricket
دنیائے کرکٹ کے لئے 25 جنوری کا دن بھی نہایت اہم ہے،بڑے بڑے کھلاڑیوں نے اس روز ٹیسٹ کیریئر کا آغاز کیا ہے۔پاکستان کے لیجنڈری پیسر وسیم اکرم بھی ان میں شامل ہیں۔
پاکستانی کرکٹ ٹیم نیوزی لینڈ کے دورے پر تھی،جیسا کہ سب جانتے ہیں کہ جاوید میاں دادکی دریافت وسیم اکرم عمران خان تک پہنچے تھے اور پھر وہ پاکستان اسکواڈ کے ساتھ نیوزی لینڈ پہنچے۔کپتانی میاں داد نے کی۔
آج کے دن 1985 میںآک لینڈ میں نیوزی لینڈ کے خلاف سیریز کا دوسرا ٹیسٹ میچ شروع ہوا۔وسیم اکرم کو اس میچ میں ٹیسٹ کیپ دی گئی۔18 سالہ لیفٹ آرم پیسر پہلے میچ میں بری طرح ناکام رہے اور اچھا تصور قائم نہ کرسکے۔ویسے تو پوری پاکستانی ٹیم ناکام رہی۔ٹیم 169پر آئوٹ ہوئی۔وسیم اکرم 8گیندیں کھیلنے کے باوجود کھاتہ نہ کھول سکے اور صفر پر آئوٹ ہوگئے۔نیوزی لینڈ نے 9وکٹ پر 451رنزبناڈالے۔وسیم اکرم 35 اوورز تک بائولنگ کی105رنز کے عوض 2وکٹ لے سکے۔وسیم اکرم کی ڈیبیو وکٹ اوپنر جان رائٹ کی تھی ،سلیم ملک نے ان کے 66 کے انفرای اسکور پر کیچ پکڑا۔پاکساتن دوسری اننگ میں بھی ناکام رہا اور 183تک محدود ہوا۔وسیم اکرم اس اننگ میں بھی کھاتہ نہ کھول سکے۔10بالز کھیل کر صفر پر ناٹ آئوٹ آئے۔
سٹیوا کے جڑواں بھائی مارک وا نے بھی آج 25جنوری1991کو ایڈیلیڈ میں انگلینڈ کے خلاف ٹیسٹ ڈیبیو کیا۔مارک وا نے 138 رنزکے ساتھ ٹیسٹ کرکٹ کاباب کھولا۔
بھارت کے امرناتھ نے1976 اورآسٹریلیا کے رچی بینونے 1952میں آج کے دن ٹیسٹ ڈیبیوکیا تھا۔بھارت کے معروف کھلاڑی چتشور پجارا کا آج یوم پیدائش بھی ہے وہ25جنوری 1988کو پیداہوئے۔
پاکستان کے لیفٹ ہینڈ پیسر وسیم اکرم اگر چہ پہلے ٹیسٹ میں کامیاب نہیں ہوئے تھے لیکن9فروری سے ڈونیڈن میں شروع ہونے والےتیسرے ٹیسٹ میں وسیم اکرم عالمی شہرت حاصل کر گئے تھے۔وسیم اکرم نے پاکستان کے بنائے گئے 274رنزمیں ایک رن کے ساتھ اپنا کھاتہ کھولا تھا اور پھر 56رنز دے کر 5کھلاڑی آئوٹ کر کے انہوں نے کیویز کو 220تک محدود کیا۔پاکستان54رنزکی لیڈ لے چکا تھا،دوسری اننگ میں پاکستان223تک جاسکا،اکرم نے8ناٹ آئوٹ رنز بنائے۔
کیویز نے 274رنز کے ہدف کے تعاقب میں اننگ شروع کی تو 23پر اسکے 4آئوٹ تھے،ان میں سے 3وکٹیں اکرم کی تھیں لیکن پھر مارٹن کرو اور جرمی کونی نے پاکستان سے فتح چھین لی۔وسیم اکرم نے اس بار بھی 5آئوٹ کئے،میچ میں انہوں نے128رنز کے عوض 10 کھلاڑی آئوٹ کئے،وہ مین آف دی میچ رہے۔دنیا نے انہیں بعد میں سوئنگ کے سلطان کا ٹائٹل دیا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں