پی ایس ایل 6کو بھی عدم اعتماد کا سامنا،ایک غیر ملکی کی واپسی،احمد آباد ٹیسٹ کی اپ ڈیٹ

عمران عثمانی
Image By PCB(File photo)
پاکستان سپر لیگ کو بھی عدم اعتماد کے ووٹ کا سامنا،ایک کھلاڑی کی پاکستان چھوڑنے کی درخواست
پاکستان سپر لیگ 6 پر تاریکی اور مایوسی کے گہرے بادل منڈلانے لگے ہیں۔ملک کے سب سے بڑے ایونٹ کو بھی اب عدم اعتماد کا سامنا ہے جس کے بعد لیگ کو اعتماد کے ووٹ کی ضرورت پڑگئی ہے،ایسا لگتا ہے کہ کراچی میں ہونے والی لیگ پر شہر اقتدار کے اثرات پڑگئے ہیں کیونکہ ایک روز قبل اسلام آباد کے پارلیمنٹ الیکشن میں روایت سے ہٹ کر حکمران جماعت پاکستان تحریک انصاف کو مرکز میں غیر متوقع شکست ہوئی،اسی روز کراچی میں کوئٹہ گلیڈی ایٹرز نے بعد میں فیلڈنگ کرکے نہ جیتنے کی روایت توڑ دی،ٹاس ہار رو،میچ ہارو کی روش دم توڑ گئی،پی ایس ایل کی 13 میچز سے جاری عجب روایت بھی ختم ہوگئی،ابھی اس نئے نتیجہ کی خوشی منائی جارہی تھی کہ اسلام آباد سے خبر آئی کہ وزیر اعظم عمران خان قومی اسمبلی سے اعتماد کا ووٹ لینے جارہے ہیں اور اس کے لئے آج جمعرات کو قومی اسمبلی اجلاس میں پیش رفت ہوگی،اسی طرح آج کراچی سے بڑی خبر یہ سامنے آئی ہے کہ پی ایس ایل 6 پر تاریکی کے بادل منڈلانے لگے ہیں،ایک غیر ملکی کرکٹرنے اپنی واپسی کی ٹکٹ منگوالی ہے،ایسے حالات میں اس نے پاکستان نہ رکنے کا فیصلہ کیا ہے،نئے 3کیسز سامنے آنے کے بعد آدھے درجن سے زائد کووڈ ٹیسٹ رپورٹ ہونے کے بعد صورتحال خاصی خراب ہوگئی ہے۔پاکستان سپر لیگ 6 پر التوا کے بادل منڈلا رہے ہیں جبکہ ایک تجویز یہ بھی ہے کہ میچز ایک ہی مقام پر رکھے جائیں اور لاہور کے میچز بھی کراچی شفٹ کردیئے جائیں۔دوسری جانب ایک تجویز یہ بھی ہے کہ کراچی میں خراب ہوتی صورتحال کے پیش نظر یہاں کے میچز بھی لاہور منتقل کردیئے جائیں اور میچز کو 5 دن تک ملتوی کردیا جائے اور اس کے بعد روزانہ ڈبل ہیڈر کی بنیاد پر میچز رکھے جائیں۔پاکستان کرکٹ بورڈ آج جمعرات کو اس حوالہ سے فیصلہ کردے گا۔
پی ایس ایل 6 پر کوروناکا دوسرا حملہ،التوا کا خطرہ،میچز کی منتقلی،3 نئے نام سامنے آگئے
کرک سین تجزیہ کے مطابق پی ایس ایل 6میں پی سی بی کے بنائے گئے کووڈ رولز کی خلاف ورزی ہوئی ہے،ایک بڑی ٹیم کے کھلاڑیوںنےکراچی ہوٹل میںبے احتیاطی کی تھی۔
دوسری جانب انٹر نیشنل کرکٹ بھی جاری ہے،ویسٹ انڈیز میں کھیلے گئے پہلے ٹی 20 میچ میں میزبان ٹیم نے سری لنکا کو4وکٹ سے شکست دے دی،میچ کی اہم بات یہ تھی کہ سری لنکا کے اسپنر اکیلا دھنن جایا نےہیٹ ٹرک کی،میزبان ٹیم 132رنزکے تعاقب میں تھی کہ سری لنکن اسپنر نے ہیٹ ٹرک کر کے تھرتھلی مچادی لیکن جب وہ اگلا اوور کرنے آئے تو ویسٹ انڈیز کے کیرون پولارڈ نے ان کے ایک ہی اوور میں 6 چھکے مار کر نہ صرف ہیٹ ٹرک کا مزا کرکرا کردیا بلکہ اپنی ٹیم کو 4وکٹ سے جیت بھی دلوادی،طویل عرصے بعد ملک کی نمائندگی کرنے والے 41 سالہ کرس گیل پہلی بال پر صفر پرگئے،ہیٹ ٹرک کی نذر ہونے والے 3کھلاڑیوں میں وہ شامل تھے۔
جمعرات کا دن انٹر نیشنل کرکٹ کے لئے ایک اور اعتبار سے بھی خاص ہے جب احمد آباد میں بھارت اور انگلینڈ کا چوتھا ٹیسٹ شروع ہوگیا،یہ میچ اتنا اہم ہے کہ اس پر ورلڈ ٹیسٹ چیمپئن شپ فائنل کی دوسری ٹیم کا انحصار ہے،بھارت جیتا یا ڈرا کیا تو فائنل میں جائےگا اور اگر انگلینڈ جیتا تو بھارت باہر ہوگا،فائنل نیوزی لینڈ اور آسٹریلیا کا ہوگا،بھارت جیت کر نیوزی لینڈ کےمقابل آجائے گا۔
احمد آباد ٹیسٹ کے پہلے روز انگلینڈکے کپتان جوئے روٹ نے ٹاس جیت کر پہلے کھیلنے کا فیصلہ کیا لیکن اس کا آغاز اچھا نہ تھا،آخری اطلاعات تک 45 پر 3 کھلاڑی پویلین لوٹ چکے تھے۔شیک کرولی9،ڈوم سبلی 2اور جوئے روٹ5رنزبناسکے،گزشتہ ٹیسٹ میں تباہی مچانے والے اکسر پٹیل 2کھلاڑی آئوٹ کرچکے تھے.
کرک سین یہاں پی سی بی کے لئے چند سوالات چھوڑے جارہا ہے کہ اس نے اس سے بھی بدترین حالات میں جنوبی افریقا کے خلاف سیریز کروائی،ڈومیسٹک ایونٹ کروایا،کوئی بڑا واقعہ نہیں ہوا.ویسٹ انڈیز میں سری لنکا،نیوزی لینڈ میں آسٹریلیا اور بھارت میں انگلینڈ کی ٹیمیں کھیل رہی ہیں.انگلش ٹیم 50دن سے ببھارت میں ہے جہاں پاکستان سے زیادہ حالات خراب ہیں لیکن کیا وجہ ہے کہ پی ایس ایل میں یکدم 7کیسز رپورٹ ہوگئے ہیں؟
یہ بات طے ہےکہ پی سی بی حکام نے پی ایس ایل پر وہ پالیسی اختیار نہیں کی جس میں سختی بھی ہوتی اور رولز کی عملداری بھی،اس کا نقصان سامنے ہے.
دوسری بات یہ ہے کہ نیوزی لینڈ کے شہر آک لینڈ میں کورونا کیس آنے پر بورڈ نے وہاں کے میچز ویلنگٹن منتقل کردیئے اور اب تک ایک میچ کھیل بھی لیا ہے،گویا آسٹریلیا کو واپس نہیں جانے دیا گیا،اسی طرح پی سی بی بھی ایسی ہی کوئی تجویز کرے،گزشتہ سال ستمبر ے شروع ہونے والے ملکی کرکٹ سیزن کو اختتامی لمحات میں بدمزہ مت کرے.ایسا کرنا کوئی مشکل امر نہیں ہے،تمام کھلاڑیوں کو یقینی دہانی کروائی جائے اور انہیں محفوظ ہونے کا ماحول فراہم کیا جائے ورنہ پی ایس ایل ختم ہوجائے گی اور پورے سیزن کا اثر محو ہوجائے گا.