دوسرا دن،پاکستان کےمزید 3 آئوٹ، کس کا غلبہ

ہرارے ٹیسٹ کا دوسرا روز پاکستانی بیٹنگ لائن کے لیے زیادہ تسلی بخش نہیں رہا. 268 رنز 4 وکٹ سے اپنی اننگ شروع کرنے والی گرین کیپ ٹیم کو شروع سے ہی اچھی پارٹنر شپ نہیں ملی. ساجد خان نے عابد علی کے ساتھ مل کر اسکور 303 تک پہنچادیا. یہاں دونوں بیٹسمین سیٹ ہوگئے تھے اور بڑے اسکور کی توقع تھی کہ ساجد 20 کرکے چلتے بنے.

نئے بیٹسمین محمد رضوان آئے تو وہ بھی سیٹ ہونے اور توقع بندھنے کے فوری بعد آئوٹ ہوگئے. رضوان نے 21 کئے اور سب سے اہم جھٹکا نچلے بلے بازوں میں حسن علی کے حوالے سے لگا جو 8 بالز کھیل کر بھی صفر پر شکار ہوگئے. یوں پاکستان کی 7 ویں وکٹ 341 پر گر گئی لیکن آپ اندازا کریں کہ یہ سطور اس وقت لکھی جارہی ہیں کہ جب پہلے سیشن کا کھیل ختم ہورہا ہے. عابد علی کہنے کو ناٹ آئوٹ ہیں لیکن 120 منٹ وکٹ پر گزارنے کے بعد 35رنز نہیں جوڑ سکے.وہ کل کے 118 سے آگے 151 پر کھیل رہے ہیں. پاکستان نے 7 وکٹ پر 353 رنز بنائے ہیں.

زمبابوے کی جانب سے موزاربانی نے 3 آئوٹ کئے .باقی سب بائولرز بھی ایک ایک آئوٹ کرگئے.

سوا ل یہ ہے کہ 268 سے 353 تک جاکر مزید 3 وکٹ کھونے والی پاکستانی ٹیم کا غلبہ رہا یا زمبابوے کا؟اسے سمجھنا ہوگا.