تیز ترین 200 وکٹ ، یاسر شاہ کادن،برائن لاراکا بھی یوم پیدائش

رپورٹ : عمران عثمانی

پاکستان کرکٹ ٹیم سے ڈراپ یاسر شاہ آج اپنا یوم پیدائش منارہے ہیں،جنوبی افریقا اور زمبابوے کے دورے کے لئے جس وقت اسکواڈز کا اعلان کیا گیا تو چیف سلیکٹر محمد وسیم نے کہا تھاکہ یاسر شاہ انجری کی وجہ سے دستیاب نہیں ہیں لیکن بعد میں یاسر شاہ کایہ بیان سامنے آیا تھا کہ وہ فٹ ہیں اور انہوں نے عدم دستیابی کی بات نہیں کی .

یاسر شاہ نے پاکستان کرکٹ ٹیم میں اس وقت انٹر ی کی جب سعید اجمل اور عبد الرحمان کا طوطی بول رہا تھا،یاسر نے اپنی جارحیت اور تیز اسپن بائولنگ کی وجہ سے جلد ہی اپنی شناخت منوالی.

2مئی 1986کو پیدا ہونے والے یاسر شاہ کو پاکستانی ٹیم میں داخلہ اچانک ہی ملا جب 2014میں سعید اجمل غیر قانونی بائولنگ ایکشن کی وجہ سے معطل کر دیئے گئے،یاسر نے اس موقع کا بھر پور فائدہ اٹھایا اور آتے ہی وکٹوں کی لائن لگادی.انہوں نے تیز ترین 50 وکٹ لینے والے پاکستانی بائولر کا اعزاز 9ویں میچ میں حاصل کرلیا.دسمبر 2018میں انہوں نے 33ویں میچ میں 200 ٹیسٹ وکٹ مکمل کرکے عالمی ریکارڈ اپنے نام کر لیا،تیز ترین وکٹوں کی ڈبل سنچری کا یہ ریکارڈ اب بھی ان کے پاس ہے.

35 سالہ رائٹ ہینڈ لیگ اسپنر کے لئے اگلا وقت نہایت ہی کٹھن اور مشکل ثابت ہوا،اب تک مزید 12 ٹیسٹ میچز کھیل چکے ہیں اور اس میں انہوں نے صرف35 کے قریب وکٹیں لی ہیں،یوں 45 ٹیسٹ میچز میں ان کی وکٹوں کی تعداد 235 ہے.گزشتہ سال وہ انگلینڈ کے دورے میں ناکام رہے،اسی طرح نیوزی لینڈ میں بھی کامیاب نہ ہوسکے.جنوبی افریقا کے خلاف ہوم سیریز میں اس سال 2میچز میں 8وکٹیں لیں لیکن کراچی ٹیسٹ کی دونوں اننگز میں 7وکٹیں بہتر پرفارمنس تھی.یاسر شاہ لگتا ہے کہ اس کے بعد سلیکٹرزکا اعتماد کھوچکے ہیں.

آج 35 سال مکمل کرنے والے یاسر شاہ کے لئے ٹیسٹ ٹیم میں واپسی بڑا چیلنج ہوگی کیونکہ عمر بھی بڑھتی جارہی ہے اور پرفارمنس میں بھی بہتری نہیں رہی ہے.ایک میچ میں 291رنز دے کر مہنگے ترین بائولر کا ٹائٹل بھی اسی دوران ان پر لگا ہے.41رنزکے عوض 8اور184رنزکے عوض 14 وکٹیں ایک اننگ اور ایک میچ کی بہترین پرفارمنس ہے.

ٹیسٹ کرکٹ میں ریکارڈ 400 رنزکی اننگ کھیلنے والے بڑے بیٹسمین برائن لارا کا بھی آج یوم پیدائش ہے،وہ آج کے دن 1969 میں پیدا ہوئے.انہوں نے ہر قسم کے فارمیٹ میں اعلیٰ ترین کلاس دکھائی ہے اور بہترین کارکردگی کامظاہرہ کیا ہے.برائن لارا نے 2بار ٹیسٹ کرکٹ کی انفرادی اننگ کا ریکارڈ توڑا تھا،ایک بار375کئے تو آسٹریلیا کے میتھیو ہیڈن نے 380کردیئے،اس کے 6ماہ بعد لارا نے پھر 400 کی اننگ کھیل کر ریکارڈ اپنے نام کیا تھا.