کورونا ویکسین،پاکستانی کرکٹرز کی دوڑیں،نیوزی لینڈ کے اعلان پر آئی پی ایل متاثر

نیوزی لینڈ کرکٹرز کے لئے حکومت کا نیا فیصلہ،آئی پی ایل میں ان کی شرکت میں تاخیر کا امکان جبکہ دورہ انگلینڈ اور ورلڈ ٹیسٹ چیمپئن شپ فائنل کھیلنے والے ٹیسٹ کھلاڑیوں کو بھی تھوڑی دیر ہوسکتی ہے.اس طرح آئی پی ایل کی وہ تمام فرنچائزز جن میں کیویز پلیئرز شامل ہیں،انہیں ان کھلاڑیوں کی خدمات کے حصول میں تھوڑی سی تاخیر ہوسکتی ہے.دورسی جانب پاکستان کرکٹ بورڈ کے ایک ایسے ہی اعلان نے تمام کھلاڑیوں کی دوڑیں لگوادی ہیں .دونوں ممالک یعنی نیوزی لینڈ اور پاکستان میں حکم نامے ایک جیسے ہی جاری ہوئے ہیں.

سب سےقبل پاکستان کا ذکر ہو کہ پی سی بی نے اعلان کیا ہے کہ تمام ایسے کرکٹرز جو پی ایس ایل میں شریک ہونگے،وہ فوری طور پر کورونا ویکیسین لگوائیں اور اس کے لئے انہیں 25مارچ یعنی کل لاہور پہنچنے کا کہا گیا ہے البتہ ایسے کھلاڑی جو دوسرے شہروں میں ہیں وہ قریبی سنٹرز جاکر ویکسین لگوائیں گے،اس ہنگا می اعلان سے کرکٹرز کو تھوڑی پریشانی ہوئی ہے.

نیوزی لینڈ حکومت نے بھی اپنے تمام کرکٹرز کو کورونا ویکسین لگوانے کا حکم جاری کیا ہے،کیوی کرکٹ حکام سے مشاورت کے بعد حکومت کے کئے گئے اعلان کے مطابق تمام کرکٹرز کی کووڈ ویکسین کی درخواستیں 31 مارچ سے شروع ہونگی.اب معاملہ یہ ہے کہ نیوزی لینڈ کے متعدد کرکٹرز کو آئی پی ایل کے لئے بھارت کا سفر اسی ماہ کے آخر سے شروع کرنا ہے جس میں تاخیر ہوسکتی ہے اور پھر بھارت پہنچ کر انہیں 7روزہ قرنطینہ کا سامنا بھی کرنا ہوگا ،اس طرح اپریل کے دوسرے ہفتہ سےشروع ہونے والی لیگ میں ان کھلاڑیوں کی شرکت میں تاخیر ہوسکتی ہے.اسی طرح نیوزی لینڈ کرکٹ ٹیم کو مئی اور جون میں انگلینڈ میں ٹیسٹ سیریز کھیلنی ہے اور ورلڈ ٹیسٹ چیمپئن شپ کا فائنل کھیلنا ہے،اس کے کھلاڑیوں کے لئے بھی ویکسین لگوانا ضروری ہوگا،اس میں تاخیرکا کوئی امکان نہیں ہے.