کورونا سے ایک اور بڑی سیریز ملتوی،محمد حفیظ و ترجمانوں کی تسلی کے لئے کافی

عمران عثما نی
Image by geosuper
کورونا نے ایک اور بڑی کرکٹ سیریز لپیٹ دی ہے. انٹرنیشنل کرکٹ ایک بار پھر کورونا کے وار پر ہے. 3 دن کے اندر دوسری مکمل سیریز ختم کردی گئی ہے. اس طرح ٹیسٹ کھیلنے والے بڑے 9 ممالک میں سے 4 ملک بری طرح متاثر ہوگئے ہیں. اس طرح اگلے کرکٹ شیڈول پر بھی اس کے اثرات آئے ہیں.
تازہ ترین واقعہ سری لنکا میں ہوا ہے. کھلاڑیوں کے کورونا ٹیسٹ مثبت آنے کے 24 گھنٹے بعد ہی سری لنکا کا دورہ ویسٹ انڈیز ملتوی کر دیا گیا ہے. ٹیم نے اسی ماہ روانہ ہونا تها. ویسٹ انڈیز میں تینوں فارمیٹ کی کرکٹ ہونی تھی. 20 فروری سے دورے کا آغاز کیا جانا تھا. 2 ٹیسٹ ،3 ون ڈے اور 3ٹی 20 میچ کھیلے جانے تھے.
وجہ کیا بنی.
وجہ سری لنکا کے ہیڈ کوچ مکی آرتهر کا خود کورونا کا شکار ہونا تھا. 36 کھلاڑیوں کے کیمپ میں کوچ کا ایک کرکٹر کے ساتھ کورونا ٹیسٹ مثبت آنا تھا. سابق پاکستانی و موجودہ کوچ اس پر بھاری پڑے.کیمپ میں شریک تمام کھلاڑی و اسٹاف ممبران ایک دوسرے سے رابطے میں تھے اس لئے سری لنکا کی پوری کرکٹ قرنطینہ ہوگئی ہے اور حکام نے آخر دورہ ہی ملتوی کردیا ہے.
3 دن قبل آسٹریلیا نے اپنا اس ماہ کس دورہ جنوبی افریقا کورونا بائیو سیکیور ببل پر تحفظات پر منسوخ کردیا تھا حالانکہ کوئی کھلاڑی کورونا کا شکار بھی نہ ہوا تھا اور یہ سیریز ورلڈ ٹیسٹ چیمپئن فائنل کے لئے نہایت ہی اہم تھی. سیریز نہ ہونے سے آسٹریلیا کا فائنل دائو پر لگ گیا ہے مگر ٹیم نہیں گئی.
ان 2 تازہ ترین واقعات سے پاکستان کرکٹ بورڈ کا موقف محمد حفیظ کے حوالے سے 100 فیصد درست ثابت ہوگیا جو ابو ظہبی ٹی 10 لیگ کی وجہ سے جنوبی افریقا کے خلاف قومی کیمپ 3 کی بجائے تاخیر سے 7 فروری کو جوائن کرنا چاہتے تھے اور پی سی بی کے سلیکٹ نہ کرنے پر حفیظ کے 2 رد عمل آئے تھے.
ترجمانوں کے ذریعے رد عمل میں انہوں نے کہا تھا کہ بورڈ ویسے ہی نہیں کھلانا چاہتا اور میں بھی منت نہیں کروں گا
آفیشل رد عمل میں کہا تھا کہ
ان اللہ مع الصابرین.
دونوں رد عمل میں اپنے موقف کی درستگی و اپنی مظلومیت کا اظہار تھا .
کرک سین نے تب بھی لکھا تھا کہ یہ ملکی کرکٹ اور کورونا وار کے باب میں احتیاط ہے. حفیظ سمیت سب تعاون کریں اور بھی کرک سین یہ لکھے گا کہ حفیظ سمیت ان کے تمام ترجمان اب اندازا کرلیں کہ ایک ہیڈ کوچ کے مثبت ٹیسٹ نے سری لنکا کی سیریز لپیٹ دی جبکہ دوسری اہم ترین سیریز خوف پر ملتوی ہوگئی.
امید ہے کہ حفیظ و ترجمان حساسیت کو سمجھ گئے ہونگے.

اپنا تبصرہ بھیجیں