حفیظ ، ملک ، وہاب اور عامرکے لئے پی سی بی نے اپنا ہی قانون بدل دیا

حفیظ ، ملک ، وہاب اور عامرکے لئے پی سی بی نے اپنا ہی قانون بدل دیا

عمران عثمانی

پاکستان کرکٹ بورڈ سینئرز کے سامنے اپنی ہی بنائی گئی پالیسی کے الٹ چلنے پر مجبور ہوگیا ہے اور اس نےمحمد حفیظ ، شعیب ملک ، وہاب ریاض اور محمد عامر کی سنیارٹی وتجربہ کودیکھتے ہوئے ترجیحی سلوک پر اتفاق کرلیا ہے۔پی سی بی نے ان کرکٹرز کو سنٹرل کنٹریکٹ سے باہر ہونے کے باوجود ملکی نمائندگی کرنے پر اے کیٹیگری کی فیس ادا کی ہے۔ یہ میچ فیس پی سی بی کی اپنی پالیسی سے براہ راست متصادم ہے ، جس میں یہ شرط عائد کی گئی ہے کہ سینٹرل کنٹریکٹ کے پول سے باہر کسی بھی کھلاڑی کو کھلانے پرسی کیٹیگری کی فیس ادا کی جائے گی۔
پی سی بی نے تصدیق کی ہے کہ ان 4 کرکٹرز کے بارے میں نئے فیصلے کی منظوری دے دی گئی ہے کیونکہ چاروں افراد نے پی سی بی سے استثنیٰ کی درخواست کی تھی اور موقف اختیار کیا تھا کہ وہ سینئر کھلاڑی ہیں۔ پی سی بی کے ترجمان کے مطابق چاروں کھلاڑیوں نے زمبابوے سیریز سے قبل پی سی بی سے منطقی اور معقول درخواست کی تھی ،پی سی بی نے انکی سینارٹی کو مدنظر رکھتے ہوئے 30 جون 2021 تک نیا فیصلہ کردیا ہے اور وہ یہ کہ ان کرکٹرز کوکسی بھی فارمیٹ میں کھیلنے پر اے کیٹیگری کے مطابق میچ فیس ادا کی جائے گی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں