بھارتی بورڈ کی چوری،پھر سینہ زوری۔۔کیا بول گئے ساروگنگولی

عمران عثمانی
کرکٹ بلکہ گلوبل کرکٹ پرکسی ایک ملک کی اجارہ داری اور پھر اوپرسے سینہ زوری دیکھنی ہوتو تازہ ترین مثال ملاحظہ کیجئے۔
بھارتی کرکٹ بورڈ کے صدر سارو گنگولی کہتے ہیں کہ بھارت اور آئی سی سی کرکٹ بحالی کے لئے ایڑی چوٹی کا زور لگارہے ہیں اس لئے پریشان ہونے کی ضرورت کسی کو نہیں ہے ،بس 6 سے 7 ماہ میں سب ٹھیک ہوجائے گا۔
ہفتہ کو اپنے ملک میں ویڈیو کانفرنس ارشادات میں سابق کپتان اور موجودہ بھارتی چیف نے اور بھی بہت سی باتیں کیں لیکن مذکورہ 2 جملے ہی پاکستان جیسے ممالک کے لئے کافی ہیں ۔گنگولی کہتے ہیں کہ پوری دنیا میں کووڈ-19کی وجہ سے جو مشکلات پیدا ہوئی ہیں ان میں کرکٹ بھی متاثر ہے لیکن پریشانی کی ضرورت نہیں کیونکہ بھارت اور آئی سی سی موجود ہیں نا۔
اسے چوری اور سینہ زوری بھی کہتے ہیں،کتنے دھڑلے سے یہ غلط جملے بولے گئے ہیں۔
کیا دنیا میں کرکٹ بحالی کی اصل کوششیں بھارت کر رہا ہے؟اسی لئے اس نے سری لنکا کادورہ وقت پر نہیں کیا اور اس کی جولائی میں کھیلنے کی درخواست پر بھی تاحال مثبت جواب نہیں دیا۔
کرکٹ بحال،ویسٹ انڈیز بورڈ نے دورہ انگلینڈ کی منظوری دیدی،بریکنگ نیوز
کیا دنیا میں کرکٹ لپیٹنے کی کوشش بھارت نہیں کر رہا اور اس نے آئی سی سی کو اپنا ہمنوا نہیں بنایا؟
تب ہی تو 5 ماہ بعد آسٹریلیا میں شیڈول ورلڈ ٹی 20 کے التوا کے درپے سوار ہیں۔
کرکٹ بحالی کی اصل اور عملی کوشش کیا ہے اور کون کر رہا ہے؟
ورلڈ ٹی20 ملتوی؟ آسٹریلیا نے ای میلز کی تصدیق کردی،آئی سی سی کاجواب بھی بتادیا،،بریکنگ نیوز
انگلینڈ جو دنیا میں امریکا کے بعد سب سے زیادہ کورونا سے متاثر ہوا ہے،وہ کر رہا ہے۔اس نے گزشتہ ماہ کے شروع سے ہی ویسٹ انڈیز اور پاکستان کی ٹیسٹ سیریز بچانے کی انتہائی حد تک اب تک کی کامیاب کوششیں کیں،اس کے بعد ویسٹ انڈیز ہے جس نے 40 ہزار کے قریب ہلاکتوں والے ملک میں جانے سےا نکار نہیں کیا اور اس کے بورڈ نے جمعہ کو دورے کی اصل منظوری دیدی۔
ایک ایسے ملک میں جہاں کورونا کی دہشت چھائی ہو،دنیا میں ہلاکتوں میں اس کا دوسرا نمبر ہو ،وہاں بھارتی بورڈ اپنے کھلاڑی فوری بھیجتا؟انگلینڈ روانہ کرتا؟
جواب واضح ہے کہ ہر گز نہیں۔
تو کرکٹ بحالی کے اصل ہیرو ویسٹ انڈین بورڈ اور اس کے کھلاڑی ہوئے جو دنیا کے ایسے ملک بنیں گے جو کووڈ-19کے بعد پہلا ٹیسٹ میچ کھیلیں گے،پھر ویسٹ انڈیز کے کرکٹرز اصل ہیرو ہونگے جو اتنے سخت حالات میں اپنے ملک سے باہر جائیں گے،اس کے بعد پاکستان کا نمبر ہے،جس نے انگلیند کے دورے کوقبول کیا اور ٹیم بھیجنے کا فیصلہ کیا،قومی کرکٹرز35 دن بعد انگلینڈ کا سفر کرکے اصل ہیرو اور ایڑی چوٹی کا زور لگاتے ہوئے دکھائی دیں گے۔
آئی سی سی رازداری لیک ہونے پر برہم، کمیٹی قائم،شعیب اختر کی تنقید،کرک سین کی پیش گوئی درست
گنگولی کہتے ہیں کہ حالات 6سے 7ماہ میں ٹھی ہوجائیں گے،5سے 6 ماہ شاید اس لئے نہیں کہا کہ ورلڈ ٹی 20 کے التوا کا جواز اپنے ہی منہ سےوہ پھوڑنا نہیں چاہتے ہونگے۔
انٹر نیشنل کرکٹ کونسل کہنے کو گلوبل باڈی ہے اور حالات یہ ہیں کہ کرکٹ آسٹریلیا کی آئی سی سی کو کی گئی ای میل بھارتی میڈیا میںشائع ہوتی ہے اور آئی سی سی کی بھارت کو کی گئی ای میلز بھی اسی بھارت میں لیک ہوتی ہیں،اوپر سے تحقیق بھی آئی سی سی ہی کرے گی۔
جون میں سری لنکا جیسے محفوظ ملک کے سفر سے انکار کرنے والا بھارتی بورڈ جولائی میں تاحال سفر کو تیار نہیں ہے اور دوسری جانب ویسٹ انڈیز ٹیم جون میں سفر کرتے ہوئے انگلینڈ پہنچ رہی ہے تو کرکٹ بحالی میں ایڑی چوٹی کا زور بھارت کا کہاں سے ہوا؟کوئی ہے جو اس کا جواب لادے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں