بگ بیش لیگ,کرکٹ آسٹریلیا,آئی پی ایل,بھارت پر وار

بگ بیش لیگ،کرکٹ آسٹریلیا کا بھی آئی پی ایل کی طرح بھارت پر وار

عمران عثمانی

کرکٹ آسٹریلیا نے آئی پی ایل طرز پر غیر ملکی کھلاڑیوں کو لانے کے لئے معاوضوں میں اضافہ کا فیصلہ کرلیا ہے جس کابنیادی مقصد لیگ کو غیر ملکی ستاروں کی کہکشاں سے بھر کر آئی پی ایل کی طرح مقبول عام بنانا ہے اور اس کےلئے اس نے معاوضے 2لاکھ 25ہزار ڈالرز سے بھی زائد کرنے کا عندیہ دیا ہے۔
اس سال بگ بیش لیگ کے 10 ویں ایڈیشن کے لئے بھارتی کرکٹرز کوبھی ہدف بنانا مقصد ہے اور انگلینڈ کے صف اول کے آل رائونڈر بین سٹوکس کو لالچ میں لانان بھی غرض ہے جو 2015کے بعد دوبارہ کبھی نہیں کھیلے ہیں۔
بھارتی کرکٹ بورڈ اپنے کرکٹرزکو غیر ملکی لیگ کھیلنےکی اجازت نہیں دیتا ہے لیکن اب ریٹائرڈ کرکٹرز کے حوالے سے اس کی پالیسی میں نرمی آئی ہے،چنانچہ حال ہی میںانٹر نیشنل کرکٹ سے ریٹائرڈ ہونے والے ایم ایس دھونی اور سریش رائنا کا حصول اس کے لئے اب آسان ہوگیا ہے۔
کرکٹ آسٹریلیا نے اپنی فرنچائزز کی جیبیں بھر نے کے لئے کئی متوازن منصوبے فائنل کرلئے ہیں ،اس کی براڈ کاسٹنگ ڈیل بھی اس سے مفید ثابت ہوگی۔
انٹر نیشنل کرکٹ کلینڈر کے تحت بین سٹوکس جیسے کھلاڑی شاید پوری لیگ کے لئے دستیاب نہیں ہونگے لیکن کسی بھی حد تک ان کی شمولیت ایونٹ کو چار چاند لگادے گی۔
بھارت سے دھونی اور رائنا سمیت کئی دیگر کرکٹرز کے لئے بھی دروازے کھیلیں گے اور انہیں پرکشش معاوضوں کی پیشکش بھی کھینچ کر لائے گی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں